امریکی صدر نے مقبوضہ بیت المقدس کو اسرائیل کا دارالحکومت تسلیم کر لیا

امریکی صدر نے مقبوضہ بیت المقدس کو اسرائیل کا دارالحکومت تسلیم کر لیا


واشنگٹن (24 نیوز): امریکہ کے صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے مقبوضہ بیت المقدس کو اسرائیل کا دارالحکومت تسلیم کر لیا۔ ٹرمپ کا کہنا تھا کہ یہ اقدام اپنے اتحادی کو تسلیم کرنے کے علاوہ اور کچھ نہیں۔ ماضی کی غلطیوں کو دہریا گیا تو مسائل حل نہیں ہونگے۔

گزشتہ رات امریکی صدر نے وائٹ ہائوس میں خطاب کے دوران کروڑوں مسلمانوں کے جذبات سے کھیلتے ہوئے بڑا اعلان کر دیا۔ مقبوضہ بیت المقدس کو اسرائیل کا دارالخلافہ تسلیم  کر لیا۔ ان کا کہنا تھا کہ یہ اقدام اتحادی کو تسلیم کرنے کے علاوہ اور کچھ نہیں۔ امریکی سفارت خانے کو مقبوضہ بیت المقدس منتقل کرنے کا حکم دیدیا، اس حکم کے بعد مسلم ممالک میں تشویش کی لہر دوڑ گئی ہے۔

ٹرمپ نے خطاب میں کہاکہ میں نے وعدہ کیا تھا کہ دنیا کو درپیش چیلنجز پر توجہ دوں گا اگر ماضی کی غلطیوں کو دہریا گیا تو مسائل حل نہیں ہونگے۔

انہوں  نے کہا کہ میرا آج کا اعلان ایک نئی سوچ کی شروعات ہے، اب وقت آگیا ہے کہ سرکاری سطح پر مقبوضہ بیت المقدس کو اسرائیل کا دارالحکومت تسلیم کر لیا جائے۔ ہم خطے میں امن اور سلامتی چاہتے ہیں۔

مزید جاننے کیلئے ویڈیو دیکھیں